Press Release

Pakistan has signed and ratified the TIR Convention of ECO but the success of TIR Convention depends on Visa Sticker and White Card schemes, this was stated by Khalid Tawab, Senior Vice President FPCCI

(Karachi P.R. 18th May, 2016) Pakistan has signed and ratified the TIR Convention of ECO but the success of TIR Convention depends on Visa Sticker and White Card schemes, this was stated by Khalid Tawab, Senior Vice President FPCCI in a meeting with the Consul General of Turkey who visited FPCCI, Head Office, Karachi along with the Commercial Atta... Read More


FPCCI delegation headed by Ms. Atiqa Odho Chairperson FPCCI SCEP visits Ficci-Frames, India to open dialogue for a bilateral exchange of talent and entertainment business between both countries

(Karachi P.R. 25th April, 2016) Federation of Pakistan Chambers of Commerce and Industry delegation headed by Ms. Atiqa Odho, Chairperson FPCCI SCEP – Standing Committee on Entertainment & Production attended FICCI-Frames in Mumbai in March 2016. The delegation consisted of Ms. Erum Shahid, Ms. Angeline Malik, Mr. Adnan Siddiqui, Ms. Maria Wasti... Read More


Shaikh Khalid Tawab, Senior Vice President FPCCI presents Crest to and had meeting with Mr. Ismail Muhammad Bkri, Consul General of Malaysia

(Karachi P.R. 19th April, 2016) Shaikh Khalid Tawab, Senior Vice President FPCCI presents Crest to and had meeting with Mr. Ismail Muhammad Bkri, Consul General of Malaysia along with Hanif Gohar, Vice President FPCCI, Zulfiqar Ali Shiekh, Vice President FPCCI, Sahibzadi Mahin Khan, Chairperson, FPCCI Regional Committee on Press and Electronic Med... Read More

پاکستان نے اقتصادی تعاون کی تنظیم (ای سی او )کے ٹی آئی آر کنونشن پر دستخط اور تصدیق نے کر دی ہے لیکن TIR کنونشن کی کامیابی کا دارومد اقتصادی ت

(کراچی مورخہ 18 مئی 2016 ) پاکستان نے اقتصادی تعاون کی تنظیم (ای سی او )کے ٹی آئی آر کنونشن پر دستخط اور تصدیق نے کر دی ہے لیکن TIR کنونشن کی کامیابی کا دارومد اقتصادی تعاون کی تنظیم (ای سی او ) ویزا اِسٹیکر اِسکیم اور وائٹ کارڈ اسکیم پر منحصر ہے۔ ان خیالات کا اظہار ( ایف پی سی سی آئی )کے سینئرنائب صدر خالد تواب نے ترکی کے قونصل جنر ل مراد مصطفی اونارٹ کے ساتھ ملاقات دوران کیا۔ جنہوں نے کے کمرشل اِیٹیچی کے ہمراہ ایف پی سی سی آئی کا دورہ کیا۔ ملاقات میں فیڈریشن چمبر آف کامرس کے نائب صدور ارشد فاروق ، ذوالفقار شیخ ،پاکستان تر کی بزنس کونسل آف ایف پی سی سی آئی کے چےئرمین عبدارشید آبر ڑو،ایکیٹنگ سیکریٹری جنرل مہر عالم خان ،اور ایف پی سی سی آئی کے ڈائریکٹر جنرل اور ای سی او چیمبر آف کامر س کے اکنامک ایڈاوائزرڈاکٹر ایوب مہر بھی شامل تھے۔

خالد تواب نے کہا کہ سارک کی طرز پراقتصادی تعاون کی تنظیم (ای سی او ) کی بھی ویزہ اِسٹیکر اِسکیم اور وائٹ کارڈ وقت کی ضرورت ہے کہ ای سی او ریجن میں ٹی آئی آر کنونشن پہ کا میابی سے عمل درآمدہو سکے۔ ۔انہوں نے مزید کہا کہ یہ دونو ں تجاویز ای سی او کے متعلقہ حکام کوپیش کی جا چکی ہیں۔ اور پاکستان میں موجود ای سی او چیمبر آف کا مر س کے سیکریٹریٹ اس معا ملے کودیکھ رہا ہے اور اس پرای سی او چیمبر آف کامر س کی ایگزیکٹوکمیٹی کے آنے والے اجلاس میں اسپر مزید بحث کی جائے گی جو کے رواں سال اگست میں تہران میں ہوگا۔انہوں نے پاکستان اور تر کی کے درمیان با ہمی تجا ر ت کو فر و غ دینے کیلئے کہا کہ دونو ں ممالک سروس سیکٹر اور فیشریزکے سیکٹرپر بھی توجہ دیں۔پاکستان نے پہلے سے ہی اپنے کمر شل بینک کی بر ا نچیں تر کی میں کھو ل رکھی ہیں جس سے دونو ں ممالک کے پرائیویٹ سیکٹر کو فا ئدہ ہو رہا ہے ۔اور انہوں نے زور دیتے ہوئے کہا کہ ترکی کو بھی اپنے بینکوں کی بر ا نچیں پاکستان میں کھولنی چا ئیے۔

ترکی کے قونصل جنر ل مراد مصطفی اونارٹ نے کہا کہ پاکستان اور تر کی ای سی او کے بنیا دی ممبران ہیں ۔جو کہ دو دہائیاں قبل آر سی ڈی کی ایک توسیعی شکل ہے انہوں نے کہا کہ دونو ں ممالک ای سی او او ریجن میں تجا ر تی اور اقتصادی تر قی میں اہم کر دار ادا کر رہے ہیں ۔انہوں نے مزید کہا کہ ای سی او کے پلیٹ فارم پہ تر کی پاکستان کو سپور ٹ کرتاہے انہوں نے مزید کہا کہ ای سی او کے ذریعے علاقائی تجا ر تی میں ا ضافہ میں مدد مل رہی ہے۔اور اب قتصادی تعاون کی تنظیم (ای سی او ) ECOTA سے FTAکی جانب بڑرہا ہے۔جو کہ تجا ر تی معاملات کو مزید آگے بڑھا ئے گا۔

ترکی کے قونصل جنر ل نے مزید کہا کہ پاکستان اور ترکی D8کے ممبر ہیں اورD8کی چےئرمین شپ اگلے سال ترکی کو سونپ دی جائیگی اور انہوں نے اس بات کا یقین دلایا کہ ترکی D8فارم پہ پاکستا ن کو ہر معمالات میں سپورٹ کر تا رہے گا۔

مہر عالم خان
سیکریٹری جنرل مزید تفصیل...


فیڈریشن آف پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی اِسٹینڈنگ کمیٹی برائے پروڈکشن اینڈ اِنٹرٹینمینٹ کی چیئرپرسن عتیقہ اوڈھوکی سربراہی می

فیڈریشن آف پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی اِسٹینڈنگ کمیٹی برائے پروڈکشن اینڈ اِنٹرٹینمینٹ کی چیئرپرسن عتیقہ اوڈھوکی سربراہی می ایف پی سی سی آئی ہیڈ آفس کرا چی (25اپریل 2016) فیڈریشن آف پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی اِسٹینڈنگ کمیٹی برائے پروڈکشن اینڈ اِنٹرٹینمینٹ کی چیئرپرسن عتیقہ اوڈھ مزید تفصیل...


فیڈریشن چیمبر آف کامرس اینڈ اِنڈسٹری کے تیسرے ایگزیگٹیوکمیٹی کے اجلاس میں بجٹ تجاویز پاک چین اقتصادی راہداری اور حلال سیکٹر کی ایکسپورٹ

ایف پی سی سی آئی ہیڈ آفس کرا چی (19 اپریل2016 ) فیڈریشن آف پاکستان چیمبر آف کامر س اینڈ انڈسٹری کی تیسری ایگزیکٹو کمیٹی اور غیرمعمولی جنرل باڈی کااجلاس کراچی میں منعقد ہوا جبکہ پنجاب اور خیبرپختونخواہ کے اراکین نے لاہور اور اسلام آباد میں ویڈیو کانفرنس کے ذریعے شرکت کی ۔اجلاس کی صدارت فیڈریشن چیمبر آف کا مر س کے صدر عبدالرؤف عالم نے کراچی سے کی ۔ سینئر نائب صدر اور نائب صدوراور ممبران کی بڑی تعداد میں شرکت کی۔
صدر عبدالرؤف عالم نے اجلاس کے دوران ایف پی سی سی آئی کی بجٹ تجاویز سے متعلق ایوان کو بتایا کہ پورے پاکستان سے ایف پی سی سی آئی کی ممبر باڈیز کی جانب سے موصول ہونے والی بجٹ تجاویز اور سفارشات کا مسوّدہ فیڈرل فنانس منسٹر اسحاق ڈار اور ایف بی آر کے چئیرمین اور وزیر اعظم کے مشیر ھارون اختر کو ایک طویل ملاقات میں پیش کیا گیا۔ ایوان نے مطالبہ کیا کہ حکومت ایف پی سی سی آئی کی بجٹ تجاویز پر غور کرے اور آنے والے بجٹ کا حصہ بنائے۔

عبدالرؤف عالم نے ایوان کو پاک چین اقتصادی راہداری سے متعلق ایف پی سی سی آئی کی کوششوں کے بارے میں بریفنگ دیتے ہوے بتایا کہ یہ راہداری ہماری ملکی معیشت کے لیے انتہائی اہمیت کا حامل ہے اور اس سلسلے میں وزراء اور متعلقہ اداروں سے ملاقاتوں کا سلسلہ جاری ہے۔ اجلاس کے دوران انہوں نے حکومت پر زور دیا کہ اس منصوبے کی تکمیل کے دوران سب سے پہلے اپنی مقامی صنعت کو تحفظ فراہم کیا جائے۔ ایوان نے اس بات کا بھی مطالبہ کیا کہ چونکہ پاک چا ئنا اقتصادی راہداری ملکی معیشت کیلئے ایک سنگ میل ہو گااور اس سلسلے میں بر وقت فیصلہ سازی اور ٹرانسپیرنسی کو ہر سطح پر ملحوظ خاطر رکھا جائے تاکہ ؂متنازعہ مسائل حل ہوں اور قو می سطح پر ہم آہنگی پیدا ہو۔ صدر نے ایوان کو بتایا کہ فیڈریشن چمبر اس سلسلے میں قومی سطح پر آگاہی اور ہم آہنگی پیدا کرنے اور اقتصادی راہداری کی اہمیت کو اجاگر کرنے کے لیے پلاننگ کمیشن آف پاکستان کے تعاون سے ایک سیمینار جلد منعقد کریگی جسمیں پاکستان بھر سے بزنس کمیونٹی کو مدعو کیا جایئگا۔

ایف پی سی سی آئی کے صدر نے ایوان کی توجہ حلال سیکٹر کی جانب مبذول کراتے ہوئے کہا کہ تقریبا2.8ٹریلین امریکی ڈالر کی کل عالمی حلال مصنوعات کی تجارت میں پاکستان کاحصہ صرف28ملین امریکی ڈالر ہے جو کہ صرف 0.5 فیصد بنتا ہے جوکہ غیر تسلی بخش ہے۔ جبکہ پاکستان بنیادی طور پر حلال مصنوعات کی پیداواروالا ملک ہے اور عالمی حلال مارکیٹ میں خا طر خوا ہ کامیابی حاصل کر سکتاہے کیونکہ پاکستان کو وسطی ایشیا ،مشرق وسطی اور یورپی ممالک میں موجو د صارفین تک بر اہ راست رسائی حاصل ہے انہوں نے کہا کہ حلا ل انڈسٹری اس وقت عالمی سطح پر تقریبا دو بیلن مسلم اور غیر مسلم افراد کی تو جہ کا با عث بنی ہو ئی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ھماری بزنس کمیونٹی کو اور حکومت کو اس طرف توجہ دینے کی ضرورت ھے۔ اس سلسلے میں ایف پی سی سی آئی پنجاب حلال فوڈ اتھارٹی کے ساتھ ملکر باقاعدہ ایک معاہدہ ضبط تحریر لایا جائیگا اور حلال مصنوعات کی ایکسپورٹ اور تجارتی سرگرمیوں کو فروغ دیا جائیگا۔

اجلاس میں ایران سے تجارت میں اضافہ پر زور دیتے ہوے کہا کہ ایران پر سے عالمی اقتصادی پابندیوں کے خا تمہ کے بعد ایرانی صدر حسن روحانی نے بھی ایک بڑے تجا ر تی وفد کے ہمراہ پاکستان کا دورہ کیا۔ اور اس دوران بھی کئی معاہدوں پر دستخط ہوئے انہوں نے بحثیت صدر ایف پی سی سی آئی ایرانی چیمبر آف کامر س انڈسٹری ما ئنز اینڈ ایگریکلچرکے ساتھ ایک MOUپر دستخط کئے جس کے تحت پاکستان ۔ایران مشترکہ چیمبر آف کامر س کی تشکیل ہو گی ۔اور MOUکے Follow upکیلئے جلد ہی وہ اپنے ساتھ ایک وفد ایران لیکر جا ئینگے۔

اسکے علاوہ ایف پی سی سی آئی کی اسلام آباد بلڈنگ کے بارے میں ایوان کو بتایا گیا کہ بلڈنگ میں تعمیر کا کام دوبارہ شروع کردیا گیا ہے اور انشاء الللہ اسی سال ایف پی سی سی آئی اسلام آباد کا آفس اس بلڈنگ میں شفٹ کر دیا جائیگا۔ دریں اثناء ایوان نے ایف پی سی سی آئی کے سالانہ مالیاتی اکاوئنٹس برائے سال 2015کی بھی منظوری دی۔


مہر عالم خان
قائممقام سیکریٹری جنرل
Back to Conversion Tool مزید تفصیل...

Chambers & Associations


Exporting To The Globe

Afghanistan Bangladesh China Iran India

United Kingdom United States Of America UAE SRI LANKA Indonesia Mauritius